صدر اور گورنرز سینٹ الیکشن مہم میں حصہ نہیں لیں گے، ضابطہ اخلاق جاری 

Feb 26, 2021 | 22:37:PM
صدر اور گورنرز سینٹ الیکشن مہم میں حصہ نہیں لیں گے، ضابطہ اخلاق جاری 
Stay tunned with 24 News HD Android App
Get it on Google Play

  (24نیوز)الیکشن کمیشن نے سیاسی جماعتوں کی مشاورت سے سینٹ انتخابات کےلئے ضابطہ اخلاق جاری کردیا جس کے مطابق صدر اور گورنرز سینٹ الیکشن مہم میں حصہ نہیں لیں گے۔

ضابطہ اخلاق کے مطابق سیاسی جماعتیں اورامیدوار انتخابات کے پر امن اور بہتر انعقاد کیلئے تمام قوانین پر عملدرآمد کریں گے، کسی کو پاکستان، خود مختاری ،استحکام اور سلامتی کے خلاف بات کرنے کی اجازت نہیں ہوگی۔

،ایسی بات سے اجتناب کرنا ہوگا جس سے عدلیہ کی آزادی یا پارلیمنٹ کی خود مختاری متاثر ہو اور افواج پاکستان کی شہرت کو نقصان ہو۔ اسلام ، نظریہ پاکستان کے خلاف کوئی پروپیگینڈا یا رائے نہیں دی جائے گی ، تمام جماعتیں اور امیدوار الیکشن کمیشن کی ساکھ کو نقصان پہنچانے سے گریز کریں گے ورنہ توہین کے مرتکب ہوں گے۔

الیکشن کمیشن کی جانب سے وقتاً فوقتاً جاری ہونے والی ہدایات کی پابندی کرنا ہوگی، کسی قسم کی کرپٹ یا غیر قانونی سرگرمیوں کا حصہ نہیں بنا جائے گا۔انتخابی امیدواران اور ان کے حمایتی کسی سرکاری ادارے، ملازم سے کسی طرح کی امداد حاصل نہیں کریں گے۔ کوئی سرکاری ملازم کسی امیدوار کو نہ پروموٹ کرے گا نا کسی کے الیکشن میں رکاوٹ بنے گا۔ صدر اور گورنر اپنے دفاتر یا گھر الیکشن مہم کے لئے استعمال نہیں کریں گے۔ 

ووٹرز پولنگ اسٹیشن میں موبائل فون یا کوئی ایسا آلہ نہیں لے کر جائیں گے جس سے ووٹ کی تصویر بن سکے۔ امیدوار تمام انتخابی اخراجات فراہم کردہ اکاو¿نٹ سے کرنے کا پابند ہوگا۔ تمام امیدوار انتخابی اخراجات ریٹرننگ آفیسر کے پاس جمع کروانے کے پابند ہوں گے۔