آٹے کی قیمت میں پھر اضافہ

May 07, 2022 | 12:38:PM
 آٹے کی قیمت میں پھر اضافہ
کیپشن:  آٹے کی قیمت (فائل فوٹو)
Stay tunned with 24 News HD Android App
Get it on Google Play

(24نیوز)فلور ملز مالکان نے آٹے کی قیمتوں میں ساڑھے 10روپے فی کلو اضافہ کر دیا ، محکمہ خوراک پنجاب کی  جانب سے سستے داموں سرکاری گندم کی فراہمی مکمل طور پر بند ہونے کے بعد فلورملز نے اوپن مارکیٹ میں گندم کی قیمتوں کے تناسب سے آٹے کی قیمت  بڑھا دی۔ 

تفصیلات کے مطابق آٹے کے 10 کلو تھیلے کی پرچون قیمت650 روپے جبکہ 20 کلو تھیلے کی پرچون قیمت 1300 روپے کردی گئی ہے،وفاقی محکمہ پاسکو کے گندم خریداری ہدف میں بھی 5 لاکھ ٹن اضافہ کردیا گیا ہے مزید برآں سرکاری گندم کی قبل از وقت ریلیز شروع کرنے کے حوالے سے حکومتی حلقوں میں متضاد آراءاور تحفظات موجود ہیں ۔

 ایک حلقہ فوری طور پر سرکاری گندم کی انتہائی کم قیمت پر ریلیز شروع کر کے آٹے کی قیمت 1100 روپے پر برقرار رکھنا چاہتا ہے جبکہ ایک بڑا حلقہ دو سے تین ماہ بعد مناسب اور قابل برداشت سبسڈی کی قیمت پر سرکاری گندم کی ریلیز شروع کرنے کا حامی ہے،رمضان پیکج کیلئے فلورملز کو 1400 روپے فی من سبسڈائزڈ قیمت پر سرکاری گندم دے کر دس کلو آٹے کا تھیلا400 روپے میں فروخت کروایا جا رہا تھا،عید تعطیلات ختم ہونے کے بعد محکمہ خوراک نے سرکاری گندم کوٹہ مکمل طور پر بند کردیا ہے جس کے بعد فلورملز کو اوپن مارکیٹ سے گندم خرید کر آٹا تیار کرنا پڑ رہا ہے۔

جنوبی پنجاب میں گندم کی قیمت2260 روپے جبکہ باقی پنجاب میں2330 روپے تک دستیاب ہے جس کے سبب فلورملز نے اسی تناسب سے آٹے کی قیمتوں کو بڑھا دیا ہے۔20 کلو آٹے کے  تھیلے کی قیمت1310 روپے بنتی ہے لیکن فلورملز ایسوسی ایشن نے عوامی مفاد میں دس روپے کم کرتے ہوئے قیمت1300 روپے مقرر کی ہے۔

علاوہ ازیں وزیر اعظم میاں شہباز شریف کی ہدایت پر محکمہ خوراک پنجاب کے خریداری ہدف میں دوسری مرتبہ اضافہ کرتے ہوئے اسے 50 لاکھ ٹن کردیا گیا ہے جو کہ پنجاب کی تاریخ کا سب سے بڑا سرکاری خریداری ہدف ہے۔

جنوبی پنجاب میں دس کلو آٹے کے  تھیلے کی قیمت 625 روپے اور بیس کلو کی 1250 روپے ہو گی کیونکہ وہاں فلورملز کو نسبتا سستی گندم ملی ہے۔فلورملز ایسوسی ایشن کے گروپ لیڈر عاصم رضا نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے قیمت نہیں بڑھائی بلکہ سرکاری کوٹہ بند ہونے کے بعد نجی گندم کی قیمتوں کے مطابق آٹا قیمت مقرر ہوئی ہے جس میں اضافہ نہیں کہا جا سکتا۔

انہوں نے کہا کہ ملز کو مہنگے داموں گندم مل رہی ہے جبکہ سرکاری محکموں کی مسلسل خریداری کے سبب فلورملز کو وافر مقدار میں گندم خریدنے کی آزادی نہیں ہے ۔علاوہ ازیں وزیر اعظم میاں شہباز شریف اور وزیر اعلی حمزہ شہباز کی ہدایت پر محکمہ خوراک پنجاب کا خریداری ہدف 50 لاکھ ٹن کردیا گیا ہے چند روز قبل بھی محکمہ کا ہدف35 لاکھ سے بڑھا کر45 لاکھ ٹن کیا گیا تھا۔