اداروں کی بنیادوں کو مضبوط بنانے کی ضرورت ہے۔۔ فواد چودھری 

Jun 28, 2021 | 20:07:PM
اداروں کی بنیادوں کو مضبوط بنانے کی ضرورت ہے۔۔ فواد چودھری 

 (24نیوز)وفاقی وزیر اطلاعا ت و نشریات فواد چودھری نے کہاہے کہ ہم نے 20سال دہشتگردی کے خلاف جنگ لڑی،انفو لیب کے ذریعے پاکستان مخالف اقدامات کئے گئے،بھارت نے پاکستان مخالف پروپیگنڈے کیلئے845سے زیادہ ویب سائٹس بنائیں،عالمی میڈیا پر پاکستان مخالف بیانیہ کے ساتھ کھڑے ہونے والے ملک کے خیر خواہ نہیں،اداروں کی بنیادوں کو مضبوط بنانے کی ضرورت ہے۔ 

پیر کو وفاقی وزیر اطلاعات نے کٹوتی کی تحریکوں پر بحث سمیٹتے ہوئے کہاکہ ایکسٹرنل پبلسٹی ونگ کی کارکردگی پر سوالیہ نشان رہا ہے،بیس سال ہم نے دہشت گردی کے خلاف جنگ لڑی ہے،بین الاقوامی میڈیا پر ہمارا بیانیہ نہیں آتا،ہمارا ایکسٹرنل پبلسٹی ونگ کا بجٹ صرف چار کروڑ ،بھارت کا اربوں کا ہے،انفولیب پکڑی گئی جس میں پاکستان کے خلاف سینکڑوں ویب سائٹ لانچ کی گئیں،بلوچستان میں شورش کو ہوا دی گئی، ٹی ایل پی کے حق میں ٹویٹس کئے گئے،اصل لڑائی “ وار آف اوپینین” ہے۔ 

وزیر اطلاعا ت نے کہاکہ پچھلی حکومتوں نے انفارمیشن منسٹری کے اداروں کو صرف ووٹروں کو نوکری دینے تک محدود رکھا،پچھلے ادوار میں پی ٹی وی میں2200لوگ بھرتی کئے گئے جنہیں 32 کروڑ تنخواہیں دیتے ہیں اور کام پانچ فیصد نہیں کرتے،اس کے نتیجے میں اے پی پی، پی ٹی وی، ریلوے، پی آئی اے، سٹیل ملز بٹھادی گئی،ہمیں اپنے اداروں کو مضبوط بنانے کی ضرورت ہے۔

 انہوںنے کہاکہ انفارمیشن منسٹری کو سابق حکومتوں نے حکمران جماعتوں کا ترجمان بنادیا ہم نے انہیں ریاست کے ترجمان بنایا ہے،اگست میں پی ٹی وی مکمل ایچ ڈی ہوجائے گا،اے پی پی کو ہم اے ایف ہی اور فائٹرز کی سطح پر لے جارہے ہیں۔

 انہوں نے کہاکہ پاکستان کی صحافتی تاریخ میں صحافیوں پر سب سے زیادہ حملے پیپلزپارٹی کے دور میں ہوئے، پی پی پی کے دور میں انتالیس حملوں میں بتیس صحافی قتل ہوئے، مسلم لیگ ن کے دور میں اٹھارہ حملوں میں چودہ صحافی قتل ہوئے،ہمارے دور میں آٹھ واقعات ہوئے، دو صحافی سندھ میں قتل ہوئے،فیک نیوز آتی ہیں جن کو افغانستان سے ہوا دی جاتی ہے جس کا حصہ ہمارے دوست بن جاتے ہیں۔

فواد چودھری نے کہاکہ ایک خاتون پروفیسر لندن میں بیٹھی ہیں پاکستان کے خلاف مہم چلارہی ہیں،یہ خاتون پاکستان ہائی کمیشن کے سامنے مظاہرہ کرتی ہیں جس کو±پورا میڈیا جگہ دیتا ہے،انٹرنیشنل میں ہمارے خلاف جو چھپتا ہے اس پر ہمارے مخالفین کی طرف سے پیسہ دیا جاتا ہے، آج امر صالح جو بیان دیتا ہے ویسی ہی بات یہاں سے جو کرتا ہے اس کو شرم آنی چاہئے۔ انہوںنے کہا کہ وزارت اطلاعات پاکستان کے بیانیہ کو آگے بڑھائے گی۔ انہوںنے کہاکہ پی ایم ڈی اے اور جرنلسٹ پروٹیکشن بل میں صحافیوں کو بھرپور حقوق دینے جارہے ہیں،کامیاب جوان پروگرام میں پاکستانی صحافیوں کو شامل کیا ہے،جرنلسٹ پروٹیکشن ایکٹ ہیومن رائٹس کمیٹی میں بلاول بھٹو زرداری لے کر بیٹھے ہیں اسے آگے بھیجا جائے۔ انہوںنے کہاکہ افغانستان سے جو پاکستان مخالف boast ملتا ہے، ہمارے نادان دوست اسکا حصہ بنتے ہیں،ریاستی میڈیا کی آپ کو کیا ضرورت ہے جب بین الاقوامی میڈیا آپ کے پیچھے کھڑا ہے ۔

یہ بھی پڑھیں۔