ہمارا روزگار چھین لیا گیا، دینے والے ہاتھ لینے والے بن گئے،فاروق ستار

May 05, 2021 | 22:03:PM
 ہمارا روزگار چھین لیا گیا، دینے والے ہاتھ لینے والے بن گئے،فاروق ستار
Stay tunned with 24 News HD Android App
Get it on Google Play

(24 نیوز)سربراہ ایم کیو ایم بحالی کمیٹی ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا ہے کہ کورونا کے پیش نظرجو کاروباری پابندیاں لگائی ہیں اس کی حمایت نہیں کرتا۔ شہر کی من پسند جگہوں پر بازار کھلے ہیں جو تعصب پھیلا رہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق سربراہ ایم کیو ایم بحالی کمیٹی ڈاکٹر فاروق ستار نے کراچی پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاکہ وفاقی حکومت نے بھی سندھ اور کراچی کو نظرانداز کیا،صوبائی حکومت نے ظلم و ناانصافی کراچی کیساتھ کی ہے۔ گزشتہ چند سالوں میں روزگار چھینا جاچکا ہے، ڈگری والے نوجوان کو نوکری مل جائے بڑی بات ہوگی،کراچی کے ڈومیسائل ہونے کے باوجود نوجوان سرکاری نوکریوں سے محروم ہیں، پہلے چھوٹی صنعتیں پھر سرکاری ملازمتوں کے دروازے بند کردیے گئے۔

سربراہ ایم کیو ایم بحالی کمیٹی نے کہا کہ کورونا کے پیش نظرلگائی گئیں پابندیوں کی حمایت نہیں کرتا ہوں کیونکہ کچھ وقت کے لئے تجارتی مراکز اور بازار کھولنے سے بے تحاشہ رش ہے، اس سے نہ سانپ مرے گا اور نہ لاٹھی ٹوٹے گی، کووڈ ایسے ہی پھیلتا رہے گا۔

ڈاکٹر فاروق ستار نے کہاکہ ڈپٹی کمشنرز تعصب کا مظاہرہ کر رہے ہیں کئی علاقوں میں 24 گھنٹے بازار کھلے ہیں جس سے عوام میں تعصب پھیل رہا ہے، کمشنر نوٹس لیں اور آئی جی سندھ بھی اپنے اہلکاروں کو رشوت وصولی سے روکیں۔انہوں نے کہاکہ ایک سال سے دینے والے ہاتھ لینے والے بن گئے ہیں، تاجروں نے ٹیکس دینے سے انکار کردیا تو پھر کیا ہوگا۔

 انہوں نے کہاکہ کراچی میں کورونا کم ہے، ویکسی نیشن سینٹر بنائے جائیں اور ویکسین 30 سال کے لوگوں کو لگائی جائے۔انہوں نے کہاکہ سعودی عرب میں 24 گھنٹے بازارکھلے ہیں، سعودی آرام سے خریداری کرکے آجاتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:اپوزیشن شفاف انتخابات چاہتی ہے کہ حکومت کیساتھ مذاکرات کرے، گورنر پنجاب