افغان عوام سخت مشکل میں۔تمام رکن ممالک مدد کریں۔اقوام متحدہ کی اپیل

Sep 01, 2021 | 20:26:PM
 افغان عوام سخت مشکل میں۔تمام رکن ممالک مدد کریں۔اقوام متحدہ کی اپیل
Stay tuned with 24 News HD Android App
Get it on Google Play

 (24نیوز)اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوٹیرش نے افغانستان کو لاحق سنگین انسانی اور اقتصادی بحران پر شدید تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہاہے کہ بنیادی خدمات کے مکمل منہدم ہو جانے کا خطرہ ہے۔ ایسے میں افغان عوام کو فوری امداد کی ضرورت ہے۔

میڈیارپورٹس کے مطابق انتونیو گوٹیرش نے متنبہ کیا کہ امریکی فورسز کے افغانستان سے انخلا اور طالبان کے کنٹرول کے بعد اس جنگ زدہ ملک میں انسانی آفت کا شدید خطرہ لاحق ہے۔ انہوں نے عالمی برادری سے افغان عوام کو ہنگامی امداد فراہم کرنے کی اپیل کی۔گوٹیرش نے ایک بیان میں ملک کو درپیش سنگین انسانی اور اقتصادی بحران پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے بین الاقوامی برادری سے مالی امداد کی اپیل کرتے ہوئے کہاکہ افغان بچوں، خواتین اور مردوں کو آج بین الاقوامی برادری کی طرف سے تعاون اور حمایت کی جتنی ضرورت ہے اتنی کبھی نہیں تھی۔ انہوں نے مزید کہاکہ میں تمام رکن ممالک سے اپیل کرتا ہوں کہ مصیبت کی اس گھڑی میں افغانستان کے ضرورت مند عوام کی ہر ممکن مدد کریں۔ میں ان سے بروقت، مناسب اور جامع مالی امداد فراہم کرنے کی بھی اپیل کرتا ہوں۔

ادھراقوام متحدہ کے ترجمان اسٹیفن جارک نے بتایا کہ اقوام متحدہ کی طرف سے افغانستان کے لئے 1.3ارب ڈالر کی مالی امداد کی اپیل کا ابھی تک صرف 39 فیصد ہی حاصل ہو سکا ۔گوٹیرش نے بتایا کہ اقوام متحدہ اگلے ہفتے افغانستان کے لیے مزید تفصیلی اپیل جاری کرے گا۔اس میں اگلے چار ماہ کے لئے فوری انسانی ضروریات اور مالی امداد کی تفصیلات بتائی جائیں گی۔اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل نے کہا کہ افغانستان کی 18ملین کی آبادی کی تقریبا نصف کو زندہ رہنے کے لئے فوری انسانی امداد کی ضرورت ہے۔

انہوں نے کہاکہ ہرتین میں سے ایک افغان کو ایک وقت کا کھانا کھانے کے بعد یہ نہیں معلوم کہ اسے اگلا کھانا کہاں سے مل پائے گا۔ پانچ برس سے کم عمر کے بچوں کی تقریباً نصف تعداد اگلے برس تک انتہائی قلت تغذیہ کا شکار ہو سکتی ہے۔

 سیکرٹری جنرل کاکہنا تھاکہ لوگ بنیادی ضروری اشیا اور خدمات تک رسائی سے ہر روز محروم ہوتے جارہے ہیں۔ ایک انسانی آفت منڈلا رہی ہے۔گوٹیرش نے مزید کہا کہ آنے والے دنوں میں زبردست خشک سالی اور سخت ترین سردی کا مطلب یہ ہے کہ لوگوں کو زیادہ خوراک، رہائش گاہ اور طبی امداد کی ضرورت ہوگی اور ان سب کا بہت تیزی سے انتظام کرنا ہوگا۔اقو ام متحدہ کے سیکرٹری جنرل نے اپیل کی،میں تمام فریقین سے اپیل کرتا ہوں کہ وہ زندگی بچانے اور زندگی کو برقرار رکھنے والی اشیا کی سپلائی انسانی امداد ی کارکنوں، مرد و خواتین، کو ضرورت مندوں تک پہنچنے میں مدد کریں اور کسی طرح کا رخنہ نہ ڈالیں۔انہوں نے امریکیوں کے انخلا مکمل ہوجانے کے بعد بھی کابل کا ہوائی اڈہ کھلا رکھنے پر زور دیا تاکہ امدادی اشیا کی فراہمی میں سہولت ہو۔

 یہ بھی پڑھیں۔نازیباتصاویر شیئر کرنے پر اداکارہ عائشہ ثنا کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری